HomeHeadlinesبعض عناصر منتخب نمائندون میں بداعتمادی پھلانے کی کوشش کررہے ہیں: جے یو ائی

Comments

بعض عناصر منتخب نمائندون میں بداعتمادی پھلانے کی کوشش کررہے ہیں: جے یو ائی — 3 Comments

  1. بقول مولانا صاحب اگر اقلیتی نمائندے کو پالیٹکس کا حق نہیں ہے تو مولوی صاحبان کو بھی نہیں ہے. انکا کام تو دین کی ترویج اور تبلیغ کرنا ہے نہ کہ دنیاوی اور خود غرض پالیٹکس

  2. ہماری بدقسمتی ہے کہ صرف چترال سے دین کے نام پر مذاق کرنے والوں کو نمایندہ چنا ہے اور جیسا کہ سب کو نظر آرہا ہے کہ وہ کچھ بھی کرنے کی صلاحیت سے مکمل محروم ہیں۔ ایم این اے چوکیداروں کے تبادلوں پر پریس کانفرنس کرتا پھر رہا یا پھر ٹنل میں سپاہی سے الجھ کر دھرنا دے رہا ہے ایسے پست سوچ کے آدمی سے کسی ترقی یا خیر خواہی کی توقع رکھنا بھی بے وقوفی ہے۔۔ چترال کے عوام کو بھی آہستہ آہستہ احساس ہورہا کہ دین کے نام پر ان بے صلاحیت لوگوں کو منتخب کرنا بے وقوفی تھی اسلئے امید ہے آئندہ قوم اچھے فیصلے کرکے ترقی کی راہ کو لوٹ آیئگی

    • I agree with you that these parties have always exploited religion to mislead the masses in Pakistan but nationwide they are almost rejected but Chitral nation is still in their grip and have been hijacked in last year elections. These molvis have nothing to do with religion they only use Islam to gain political advantage and innocent people are carried out by their antics. We need leaders who could serve us without exploiting us on sentiments of religion, caste and creed.

Leave a Reply