HomeHeadlinesنیا انتخابی شوشہ

Comments

نیا انتخابی شوشہ — 6 Comments

  1. Zaheeruddin saib !Tarjuma ta tan te na sar jam goyan,magam tu azbun kosan.Iqbal reran ki ” Jamhooriato sar duderi ushture,tu e kuhna mitaro muli ghere.waja haya ki 200 gordoghan e xaghaa angiko haetan aqul e insano babara no boi.”

  2. Assalamualaikum. Sir Could you please translate the poem of IQBAL in urdu or English.

    • حضرت اقبال نے ون مین ون ووٹ والی جمہوریت کو مسترد کیا ہے۔آنپڑھ سوسائیٹی میں ووٹ کی اہمیت کی سمجھ نہیں ہوتی۔ اس لیے اس قسم کی جمہوریت سے بھاگ جانے اور دانشمند لوگوں کی پیروی کا مشورہ دیا ہے۔ اس شعر کا لفظی ترجمہ نہ کرنا ہی بہتر ہے

  3. کاش تہ برار بیزیمونو کی بیسام تہ ہ مشورہ شور فیصد درست اوشوئے۔ متے ہ چال نو گوئے۔ اوا مشرف صاحبو محبتو ومدار وا تان زندگیا ہورو سار جم لیڈر دی نو پوشی اسُم۔ہرین دِتی ژان شیکہ پت ہورو سم اسُم۔ الیکشہ روپھِکو شوق ہر گز نیکی۔کلہ پت کہ تہ آخری لوو تعلق شیر ہیس درست نو۔چشمان بدل کوری لوڑے تہ غیچی گوئے

  4. Welcome Aseer sb ! Kaash aap Sultan Mehmood sb ko lekar Azad election lartey. APML Pakistan me kehen bhi nazar nhi aati.

  5. آخرکار فیضی صاحب بھی مان ہی گئے جس کی ہم ورد کرتےرہے تھے کہ جناب ہماری جمہوریت ڈکٹیٹرشپ سے بھی بدتر ہے۔ پھر بھی پی پی پی کو اگلی مدت کے لیے اقتتدار کی نوید سنانے کی تک سمجھ میں نہیں آئی۔ ان دو پارٹیوں نے ملک میں ایک نئے طرز کی شاہی حکومت کی داغ بیل ڈالی ہے تو کیا ہم اس طرز جمہوریت سے گریز نہ کریں اور غلام پختہ کارے نہ بن جائیں؟